Delhi دہلی

اس پالیسی کو اپنانے والے تجارتی اور صنعتی صارفین کا بجلی کا بل بھی آدھا رہ جائے گا: اروند کیجریوال

نئی دہلی(پی ایم ڈبلیو نیوز) دہلی کے لوگوں کے لیے پیر کا دن بہت اچھی خبر لے کر آیا ہے۔ کیجریوال حکومت "دہلی سولر پالیسی 2024” لے کر آئی ہے، جس کے نفاذ کے بعد دہلی کے اندر رہائشی علاقوں میں رہنے والے تمام خاندانوں کا بجلی کا بل صفر ہو جائے گا، جب کہ تجارتی اور صنعتی صارفین کا بجلی کا بل بھی آدھا رہ جائے گا۔ اس پالیسی سے نہ صرف دہلی میں مہنگائی کی شرح میں کمی آئے گی بلکہ فضائی آلودگی کو کم کرنے میں بھی مدد ملے گی۔ دہلی سکریٹریٹ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے نئی پالیسی کے بارے میں تفصیلی معلومات شیئر کیں۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ حکومت نے سولر پالیسی 2024 جاری کر دی ہے۔ اس سے قبل 2016 میں سولر پالیسی جاری کی گئی، جس نے دہلی میں شمسی توانائی کی بنیاد رکھی۔ رہائشی علاقوں کے صارفین جو نئی پالیسی کو اپناتے ہیں ان کا بجلی کا بل صفر ہوگا اور وہ 700 سے 900 روپے کی اضافی آمدنی بھی حاصل کریں گے۔ اس کے ساتھ ہی صارفین کے سولر پینلز کی تنصیب پر اٹھنے والے اخراجات بھی 4 سال کے اندر وصول کیے جائیں گے۔ اس دوران وزیر بجلی آتشی کے علاوہ جاسمین شاہ بھی موجود رہے۔وزیراعلیٰ اروند کیجریوال نے پیر کو دہلی سکریٹریٹ میں ‘دہلی سولر پالیسی 2024’ کے حوالے سے ایک پریس کانفرنس کی۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ دہلی حکومت نے دہلی سولر پالیسی 2024 جاری کی ہے۔ اس سے پہلے، 2015 میں ہماری حکومت بننے کے بعد، ہم نے 2016 میں دہلی سولر پالیسی 2016 جاری کی تھی۔ 2016 میں ہماری ریلیزسولر پالیسی پورے ملک میں سب سے زیادہ ترقی پسند پالیسی تھی۔ ایک طرح سے سولر پالیسی 2016 نے دہلی میں شمسی توانائی کی بنیاد رکھی۔ سولر پالیسی 2016 کے تحت دہلی کے لوگوں نے اب تک اپنے گھروں کی چھتوں پر تقریباً 250 میگاواٹ صلاحیت کے سولر پینل لگائے ہیں۔ اس کے علاوہ سولر پالیسی 2016 کے تحت ڈسکام نے 1250 فراہم کیے ہیں۔میگا واٹ سولر پاور باہر سے خریدی گئی ہے۔ اس طرح سولر پالیسی 2016 کے تحت دہلی کے اندر اب تک تقریباً 1500 میگاواٹ سولر پاور لگائی جا چکی ہے۔وزیراعلیٰ اروند کیجریوال نے کہا کہ شمسی توانائی سے فضائی آلودگی کم ہوتی ہے۔ ہم نے فضائی آلودگی کو کم کرنے کے لیے ای وی پالیسی بھی بنائی ہے، جو کہ ملک میں سب سے زیادہ ترقی یافتہ ای وی پالیسی ہے اور آج دہلی کو ہندوستان کا ای وی کیپٹل کہا جاتا ہے۔ دسمبر 2023 میں دہلی میں خریدی گئی کل گاڑیوں کا تقریباً 20 فیصدالیکٹرک گاڑیاں تھیں، جو پورے ملک میں سب سے زیادہ ہے۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ دہلی سولر پالیسی 2024 کی سب سے بڑی خصوصیت یہ ہے کہ اس کے تحت جو لوگ اپنے گھروں پر سولر پینل لگائیں گے، ان کا بجلی کا بل صفر ہو جائے گا۔ دہلی میں ہماری حکومت ہر خاندان کو 200 یونٹ مفت بجلی فراہم کرتی ہے۔ 200 یونٹ تک بجلی استعمال کرنے والوں کا بجلی کا بل صفر ہے۔ 201 سے 400 اس کے بعد یونٹ بجلی استعمال کرنے والوں کے بجلی کے بل کا نصف (50 فیصد) کم کر دیتا ہے۔ اس کے علاوہ 400 یونٹ سے زائد بجلی استعمال کرنے والے پورا بل ادا کرتے ہیں۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ سولر پالیسی 2024 کے تحت سولر پینل لگانے والوں کا بجلی کا بل صفر ہو جائے گا۔ وہ بھی جو 201 سے 400 یونٹ بجلی استعمال کرتے ہیں۔بجلی کا بل صفر ہو جائے گا اور 400 یونٹ سے زائد بجلی استعمال کرنے والوں کا بل بھی صفر ہو جائے گا۔ دہلی سولر پالیسی 2024 کے نفاذ کے بعد دہلی کے تمام رہائشی شعبوں میں لوگوں کا بجلی کا بل صفر ہو سکتا ہے۔ چاہے آپ 800، 1000 یا 2000 یونٹ بجلی استعمال کریں، بل صفر ہوگا۔ یہ اس پالیسی کی سب سے خاص ہے۔

Related posts

یہ علم کا سودا یہ رسالے یہ کتابیں،اک شخص کی یادوں کو بھلانے کے لیے ہیں

Paigam Madre Watan

इग्नू ने मनाया 38वां स्थापना दिवस; श्री विनय कुमार सक्सेना, माननीय उपराज्यपाल, दिल्ली इस अवसर पर मुख्य अतिथि के रूप में उपस्थित थे

Paigam Madre Watan

مولانا عرفان اشاعتی صاحب نے دولت مند،صاحبِ خیر حضرات کے ذریعے جملہ70سے زائد طلباء و طالبات تعلیمی مستقبل کو سنوارا ہے

Paigam Madre Watan

Leave a Comment

türkiye nin en iyi reklam ajansları türkiye nin en iyi ajansları istanbul un en iyi reklam ajansları türkiye nin en ünlü reklam ajansları türkiyenin en büyük reklam ajansları istanbul daki reklam ajansları türkiye nin en büyük reklam ajansları türkiye reklam ajansları en büyük ajanslar