Delhi دہلی

اے آئی ایم ای پی نے نئی دہلی میں "ناری شکتی نیشنل کانکلیو” ؑٓعالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ کی صدارت میں منعقد کیا

ہم آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ کے ساتھ ہر وقت کھڑے دکھائی دیں گے:رام داس اٹھاﺅلے

نئی دہلی (نیوز ریلیز:مطیع الرحمن عزیز)آل انڈیا مہیلا ایمپاورمنٹ پارٹی (اے آئی ایم ای پی) نے 7 فروری 2024 کو "ناری شکتی نیشنل کانکلیو” کے نام سے ایک اہم تقریب کی میزبانی کی۔ کنکلیو نے خواتین کو بااختیار بنانے اور معاشرے میں ان کی قیادت کو فروغ دینے پر توجہ مرکوز کی گئی۔ اس تقریب میں نے خواتین کے ریزرویشن ایکٹ کی ستائش کی گئی۔ حال ہی میں پارلیمنٹ سے منظور اس بل پر جن ممبران پارلیمنٹ نے ووٹ کیا تھا ان سب کے نام مومنٹو اور اسناد تفویض کی گئی۔ اس تقریب میں سیکڑوں معززین نے ملک بھر سے شرکت کرتے ہوئے پروگرام کو کامیاب بنایا۔اس پروگرام کا مقصد خواتین کو فیصلہ سازی کے کردار میں مزید مواقع فراہم کرنا ہے۔اس تقریب میں مرکزی وزیر جناب رام داس اٹھاﺅلے نے خصوصی طور پر شرکت کی اور تقریب سے خطاب کرتے ہوئے قابل تعریف الفاظ کی ادائیگی کی۔ رام داس اٹھاﺅلے جی نے عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ سے یقین دہانے کراتے ہوئے کہا کہ اس مہم اور آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی کو ہمیشہ میرا تعاون دستیاب رہے گا کیونکہ خواتین کو با اختیار بنانے کی ملک میں پہلی پارٹی ہے اور یہ قدم اور مہم قابل ستائش اور قابل تعریف ہے۔اس تقریب میں سیاست، تعلیمی، میڈیا، فنون، کھیل اور انسان دوستی جیسے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے 350 سے زیادہ بااثر افراد نے شرکت کی۔ وہ معاشرے میں خواتین کی ترقی پر تبادلہ خیال اور فروغ دینے کے لیے اکٹھے ہوئے تھے۔ ایک خاص بات یہ تھی کہ "وکِسِت بھارت وژن ڈاکومنٹری” پیش کی گئی، جس میں مزید روشن خیال اور ترقی پسند معاشرے کے اہداف کا خاکہ پیش کیا گیا۔
آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی کی بانیہ اور قومی صدر عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ نے "خواتین کی ترقی سے خواتین کی زیر قیادت ترقی” کے موضوع پر ایک فکر انگیز مباحثہ پینل کی قیادت کی۔ جس میں اس بات کی کھوج کی گئی کہ کس طرح خواتین معاشرتی ترقی کو آگے بڑھانے میں زیادہ اہم کردار ادا کر سکتی ہیں۔سماجی انصاف اور صنف نازک کو بااختیار بنانے کیلئے ڈیڈیکیٹڈ مرکزی وزیر مملکت ڈاکٹر رامداس اٹھاولے جیسے ممتاز اسپیکرز نے روشن خیال کلیدی خطابات پیش کیے، خواتین کو بااختیار بنانے اور صنفی مساوات کو فروغ دینے کی اہمیت پر زور دیا۔اے آئی ایم ای پی کو خواتین کو بااختیار بنانے کے لیے اپنی لگن اور کنکلیو کے انعقاد میں اس کے کردار کی تعریف ہوئی۔ مرکزی وزیر جناب رام داس اٹھاﺅلے نے تقریب کے انعقاد میں عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ کو خواتین کی بااختیار بنانے کی ان کی قیادت کی علامت قرار دیا۔ایک دستاویزی فلم (ڈاکیومنٹری) میں خواتین کو بااختیار بنانے میں عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ کے تعاون کو پیش کیا گیا، ان کے سفر اور کامیابیوں پر تفصیلی روشنی ڈالی گئی۔ ساتھ ہی ساتھ اس نے خواتین کے حقوق کو آگے بڑھانے کے لیے ان کے عزم کے ثبوت کے طور پر کام کیا۔
خواتین کے ریزرویشن بل کی حمایت کرنے والے اراکین پارلیمنٹ کو صنفی مساوات کو فروغ دینے اور خواتین کو بااختیار بنانے کی کوششوں کے لیے سراہا گیا۔ عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ نے ان کی لگن کے لیے انہیں ایوارڈز سے نوازا۔عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ نے تقریب کو کامیاب بنانے میں شامل تمام لوگوں کا شکریہ ادا کیا جن میں مہمانوں، اسپانسرز، پارٹنرز، میڈیا اور رضاکار شامل ہیں۔ انہوں نے خواتین کو بااختیار بنانے اور سماجی ترقی کو فروغ دینے میں ان کے تعاون پر اظہار تشکر کیا۔”ناری شکتی نیشنل کانکلیو” خواتین کی کامیابیوں کے جشن اور معاشرے میں ان کو بااختیار بنانے کے حوالے سے گفتگو کے لیے ایک یادگار ثبوت کے طور پر ثابت قدم ہے۔ اس شاندار کانفرنس نے روشن خیالی کا ایک اہم کردار ادا کیا، جہاں خواتین کی حیثیت اور اثر و رسوخ کو بڑھانے پر غور و فکر کرنے کے لیے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے روشن خیال افراد کو مدعو گیا۔ فیصلہ سازی میں خواتین کے اہم کردار پر زور دیتے ہوئے، اجتماع صنفی مساوات کو فروغ دینے کے بارے میں علمی گفتگو سے گونج اٹھا۔ اس نے شمولیت کو فروغ دینے اور مساوات کے اصولوں کو آگے بڑھانے کے لیے مستقل کوششوں کے لیے ضرورت پر زور دیا۔ درحقیقت، یہ کانفرینس محض ایک تقریب نہیں تھا بلکہ اجتماعی عزم کی ایک علامت تھی، جو عورت کی فلیکسیبلٹی اور ناقابل تسخیر جذبے کی علامت ہے۔

Related posts

اقرا انٹرنیشنل اسکول میں جلسہ سیرت النبی ﷺ و دستار بندی حفاظ کرام کا کامیاب انعقاد

Paigam Madre Watan

ڈرائیوروںکا متحدہ احتجاج کامیاب ہوا ہے۔ ایس ڈی پی آئی

Paigam Madre Watan

آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی پر جوش طریقے سے تعلیم کے شعبے میں برابری کو فروغ دینے کیلئے پوری طرح مخلص: ڈاکٹر نوہیرا شیخ

Paigam Madre Watan

Leave a Comment