Delhi دہلی

فی الحال ملازمین کو پانچ ماہ کی تنخواہ دی گئی ہے، باقی تنخواہ بھی جلد مل جائے گی: اروند کیجریوال

نئی دہلی، دہلی میونسپل کارپوریشن کی طرف سے سبسڈی والی ہردیال میونسپل لائبریری کے ملازمین کے لیے بدھ کا دن بہت خاص بن گیا۔ وزیر اعلی اروند کیجریوال نے ہردیال لائبریری کے 96 ملازمین کی تنخواہ کا مسئلہ حل کر لیا ہے، جو ایم سی ڈی میں بی جے پی کے دور سے پھنسا ہوا تھا۔ بدھ کو کیمپ آفس میں سی ایم ٹیکس حکام سے میٹنگ کے بعد انہوں نے انہیں پانچ ماہ کی تنخواہ کا چیک دیا اور بقیہ تنخواہ جلد ملنے کی یقین دہانی کرائی۔ طویل انتظار کے بعد تنخواہیں ملنے پر ملازمین کے چہرے کھل اٹھے۔ وزیر اعلی اروند کیجریوال کا شکریہ ادا کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اگر دہلی مفت بجلی، پانی، صحت، تعلیم اور خواتین بس سے سفر کر سکتی ہیں۔اگر وہ سہولیات سے استفادہ نہ کر پاتے تو انہیں اپنے گھریلو اخراجات کا انتظام کرنے میں مزید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا۔ ساتھ ہی وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ ہماری حکومت عام لوگوں کی ہے۔ اسی لیے ہم عام لوگوں کے دکھ درد کو سمجھتے ہیں، کیونکہ ہم عام لوگوں میں سے آئے ہیں۔ جو کام ہم عام آدمی کے لیے کر رہے ہیں وہ کسی اور جماعت نے نہیں کیا۔حکومت نے کبھی ایسا نہیں کیا اور نہ ہی کرنا چاہتے ہیں۔ اس دوران ایم سی ڈی انچارج درگیش پاٹھک، میئر ڈاکٹر شیلی اوبرائے، ڈپٹی میئر آل محمد اقبال اور دیگر ملازمین موجود رہے۔ہردیال میونسپل لائبریری کے ملازمین سے ملاقات کے دوران وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ مجھے بہت خوشی ہے کہ اتنی جدوجہد کے بعد اب تمام ملازمین کی تنخواہیں ملنا شروع ہو گئی ہیں۔ اس وقت ملازمین کو پانچ ماہ کی تنخواہ دی گئی ہے اور 35 ماہ کی تنخواہیں باقی ہیں۔ اب سارا عمل مکمل ہو چکا ہے۔اس لیے بقیہ تنخواہ بھی جلد مل جائے گی۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ ہماری حکومت عام لوگوں کی ہے۔ ہم عام لوگوں کے دکھ درد کو سمجھتے ہیں۔ کیونکہ ہم عام لوگوں میں سے آئے ہیں اور ہم کوئی لیڈر نہیں ہیں۔ پنجاب میں ہماری حکومت بنی، وہاں ہمارے 92 ایم ایل اے ہیں۔ ان 92 ایم ایل اے میں سے 80 لوگ پہلی بار الیکشن لڑکر ایم ایل اے بنے ہیں۔ اسی طرح دہلی میں بھی چند لوگوں کو چھوڑ کر باقی سب نے پہلی بار الیکشن لڑا اور ایم ایل اے بنے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ ہم سب متوسط گھرانوں سے آتے ہیں۔ لہذا، ہم سمجھتے ہیں کہ گھریلو اخراجات کا انتظام کرنا کتنا مشکل ہے۔ تنخواہ 20 دن کے اندر ختم ہو جاتی ہے۔ باقی 10 دن گزرنا بہت مشکل ہے۔ اگر آپ کو تنخواہ ملنا بند ہو جاتی ہے تو آپ موت کے قریب ہیں۔ ہم نے دہلی میں لوگوں کو بجلی فراہم کی ہے۔پانی، بچوں کی فیس، علاج وغیرہ پر زیادہ کام ہوا ہے۔ عام آدمی پارٹی کے صرف 10 سال میں پنجاب اور دہلی میں حکومت بنانے کی سب سے بڑی وجہ یہ ہے کہ جو کام ہم کر رہے ہیں وہ کبھی کسی اور پارٹی نے نہیں کیا اور نہ ہی وہ کرنے کی خواہش رکھتی ہے۔ یہ لوگ ہمارے ساتھ بہت زیادتی کرتے ہیں۔ لیکن ایک عام آدمی کی بنیادی ضرورت بجلی، پانی، تعلیم اور علاج کی ہے۔ عام آدمی کو مناسب بجلی، پانی، تعلیم اور صحت مل جائے تو اسے اور کیا چاہیے؟ ہم ہردیال میونسپل لائبریری کے ملازمین کے دیگر مطالبات پر بھی غور کریں گے۔ہردیال لائبریری سے ہمارا پرانا تعلق بھی ہے۔وزیراعلیٰ اروند کیجریوال نے کہا کہ ایماندار اور بے ایمان حکومت میں فرق دیکھنے کا یہی واحد طریقہ ہے۔ ایک بے ایمان حکومت تھی جس نے MCD کو 15 سالوں میں برباد کر دیا۔ اب ایم سی ڈی میں ایک ایماندار حکومت ہے۔ ابھی ان لوگوں نے ہماری ساری طاقت چھین لی ہے۔ انہوں نے ابھی تک ایم سی ڈی کی اسٹینڈنگ کمیٹی کی تشکیل نہیں ہونے دی ہے۔جس کی وجہ سے کئی مسائل کا سامنا ہے۔ اس کے باوجود پچھلے ایک سال میں ایم سی ڈی میں کتنی تبدیلی آنا شروع ہو گئی ہے۔ دہلی حکومت چلانے میں ہمیں کئی مسائل کا سامنا ہے۔ دیانت دار حکومت ہو تو حکومتوں میں پیسے کی کمی نہیں، صرف نیتوں کی کمی ہے۔ اچھی نیت کے ساتھ حکومت لائیں تو سب ٹھیک ہو جائے گا۔اگر ہماری نیت اچھی ہے تو ہم اپنے ارد گرد صرف نیک نیتوں کو ہی رکھیں گے۔ اگر ہماری نیت خراب ہوتی تو میں اپنے ارد گرد کچھ دلال رکھ لیتا، جو پوری دہلی سے پیسے اکٹھے کر لیتے۔

ملازمین کو 30 ماہ سے تنخواہ نہیں مل رہی، کئی جگہوں پر ان کی توہین ہو رہی ہے: درگیش پاٹھک

اس دوران ایم سی ڈی انچارج اور ایم ایل اے درگیش پاٹھک نے کہا کہ ہمارے ملک میں کام کرنے والوں کو سب سے زیادہ پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ ہردیال میونسپل لائبریری کے ملازمین کو 30 ماہ سے زیادہ کی تنخواہیں نہیں ملی تھیں اور جگہ جگہ ان کی توہین کی گئی تھی۔ کئی بار یہ لوگوں نے یہ بھی شکایت کی تھی کہ وہ ان سے اپنے گھر اور ڈرائیور کا کام کرواتی تھی۔ اس کے علاوہ کئی خواتین کو گھر بلا کر ان کی توہین بھی کی گئی۔ ملازمین کی طویل جدوجہد تھی۔ بجلی کے بل کی عدم ادائیگی کی وجہ سے ہدریال لائبریری کو گزشتہ دو تین ماہ سے بجلی نہیں مل رہی تھی۔ اب بل جمع ہو گیا ہے۔ ہم بڑی جدوجہد کے بعد پوری کمیٹی تبدیل کر دی گئی۔ سابق سیکرٹری بینک جا کر کہتے تھے کہ یہ ان کے دستخط ہیں اور کسی کے دستخط پر غور نہیں کیا جائے گا۔ اسے ایک گاڑی الاٹ ہوئی تھی، وہ بھی لے لی اور بعد میں واپس کر دی۔ آج وزیراعلیٰ اروند کیجریوال کی رہنمائی میں ہردیال میونسپل لائبریری کے تمام طلباء ملازمین کو تنخواہیں مل چکی ہیں۔

تنخواہ ملنے کے بعد ملازمین کے خوش چہروں نے وزیراعلیٰ کیجریوال کا شکریہ ادا کیا

ہردیال لائبریری کے ملازمین، جو تین سال سے اپنی تنخواہوں کے لیے جدوجہد کر رہے ہیں، کے چہرے آج اس وقت چمک اٹھے جب وزیراعلیٰ اروند کیجریوال نے انہیں پانچ ماہ کی تنخواہ کا چیک دیا اور بقیہ تنخواہ جلد ملنے کا یقین دلایا۔ اس دوران ملازمین نے وزیراعلیٰ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ہم تین سال سے پریشان تھے۔ ہمیں ادا کرنے کی کوئی امید نظر نہیں آتی تھی۔ اس عرصے میں ہم سب کو بہت سی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑا۔ ملازمین کا کہنا تھا کہ اب ہمیں تنخواہیں ملنا شروع ہوگئی ہیں۔ اس کے علاوہ اب خواتین کے لیے دفتر آنا آسان ہو گیا ہے کیونکہ خواتین بسوں میں مفت سفر کرتی ہیں۔ دہلی کے شہری ہونے کے ناطے ہمیں مفت بجلی اور پانی کی اسکیم سے بھی کافی فائدہ ہوتا ہے۔ اس عرصے میں ہم نے جتنی بجلی اور پانی مفت دستیاب تھا استعمال کیا۔ ملازمین نے دہلی میں مختلف مقامات پر حکومت کی طرف سے لگائے گئے ترنگے جھنڈوں کی بھی تعریف کی۔ ملازمین نے کہا کہ ترنگا دیکھ کر ذہن میں حب الوطنی کا جذبہ بیدار ہوتا ہے۔ملازمین نے کہا کہ ہمیں دہلی کے شہری ہونے پر فخر کرتے ہیں۔ جب دہلی میں عام آدمی پارٹی کی حکومت بنی تو ہمیں امید تھی کہ ملازمین کے لیے بہت زیادہ فلاح و بہبود ہوگی۔ "آپ” کی حکومت دہلی سے کبھی نہیں جائے گی کیونکہ اروند کیجریوال دہلی والوں کے دلوں میں رہتے ہیں۔ہردیال لائبریری کے ملازمین 32 ماہ سے ہڑتال پر بیٹھے تھے۔قابل ذکر ہے کہ ہردیال میونسپل لائبریری ایک آزاد ادارہ ہے۔ اسے چلانے کے لیے دہلی میونسپل کارپوریشن کی طرف سے گرانٹ دی جاتی ہے۔ اس گرانٹ سے ملازمین کی تنخواہوں سمیت دیگر اخراجات پورے کیے جاتے ہیں۔ یہاں 96 ملازمین کام کر رہے ہیں۔ ایم سی ڈی کی سابقہ بی جے پی حکومت نے 2021 میں گرانٹ دینا بند کر دیا تھا۔ یہاں کام کرنے والے ملازمین اپنی تنخواہوں کے مطالبے کو لے کر گزشتہ 32 ماہ سے ہڑتال پر تھے۔ اسی وقت، ایم سی ڈی میں عام آدمی پارٹی کی حکومت آنے کے بعد سے، ہردیال لائبریری کے ملازمین میئر کے دفتر سے رابطہ کر کے تنخواہیں جاری کرنے کی درخواست کر رہے ہیں، تاکہ وہ اپنی روزی کما سکیں۔ اس کے بعد وزیراعلیٰ اروند کیجریوال کی ہدایت پر ایم سی ڈی میئر کی بہت کوششوں کی وجہ سے تنخواہ سے متعلق مسائل کو حل کیا جا رہا ہے۔ ان کی کوششوں کی بدولت آج ملازمین کو 2021 کے لیے 5 ماہ کی تنخواہ یکمشت دی گئی۔

Related posts

بھٹنڈہ کی وکاس کرانتی ریلی میں 1125 کروڑ روپے کے ترقیاتی کاموں کا آغاز کرتے ہوئے کیجریوال نے کہا، "پنجاب اب ترقی کی راہ پر گامزن ہے۔”

Paigam Madre Watan

نئے کریمنل لا کے تئیں بیداری پیدا کرنے کے لیے قومی اردو کونسل میں پروفیسر نزہت پروین کا لیکچر

Paigam Madre Watan

وزیر ٹرانسپورٹ کیلاش گہلوت میٹرو کے ذریعے دہلی سیکرٹریٹ میں اپنے دفتر پہنچے، مسافروں کے تجربات اور تجاویز جاننے کے لیے ان سے بات چیت کی

Paigam Madre Watan

Leave a Comment

türkiye nin en iyi reklam ajansları türkiye nin en iyi ajansları istanbul un en iyi reklam ajansları türkiye nin en ünlü reklam ajansları türkiyenin en büyük reklam ajansları istanbul daki reklam ajansları türkiye nin en büyük reklam ajansları türkiye reklam ajansları en büyük ajanslar