Delhi دہلی

ہیرا گروپ نے گولڈ ٹریڈنگ کا کاروبار شروع کیا

 میری فتح قانون کے بالادستی کی علامت ہے: ڈاکٹر نوہیرا شیخ

نئی دہلی (نیوز ریلیز: مطیع الرحمن عزیز) ہیرا گروپ سی ای او عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ نے اپنی کمپنی کی جانب سے گولڈ ٹریڈنگ کا سلسلہ شروع کر دیا ہے۔ اس کاروبار میں شراکت اور سرمایہ کاری کے لئے ویب سائٹ (ڈبلیو ڈبلیو ڈبلیو ڈاٹ ہیرا ای آر پی ڈاٹ ان )کے نام سے جاری کیا گیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ ہیرا گروپ گولڈ ٹریڈنگ میں سرمایہ کاری کے لئے اسی ویب سائٹ میں ساری سہولیات مہیا کر دی گئی ہے۔ اس ویب سائٹ میں چار مرحلوں پر سرمایہ کاری کا عمل مکمل کیا جا سکتا ہے۔ پہلا مرحلہ ویب سائٹ پر اپنی آئی ڈی اور محفوظ پاسورڈ بنانے کا ہے۔ دوسرا مرحلہ اپنی تمام تفصیلات جیسے اکاﺅنٹ پاس بک کاپی، آدھار کارڈ اور پاسپورٹ سائز فوٹو اپلوڈ کرکے تمام طرح کی ذاتی جانکاریاں طلب کی گئی ہیں۔ جیسے نام، ولدیت، قومیت، ذات، ایڈریس وغیرہ۔ تیسرے مرحلے میں تین اکاﺅنٹ کی تفصیلات مہیا کرائی گئی ہیں۔ جس میں سرمایہ کار اپنے یونٹ کے مطابق پیسے جمع کرا کے ٹرانجیکشن کی تفصیلات اسی ویب سائٹ پر ہی مہیا کرا دی جائے گی۔ اس کے بعد کچھ مزید تفصیلات طلب کی گئی ہے۔ جس میں دو نومنی (وارث) کے تفصیلات طلب کئے گئے ہیں۔ چوتھے مرحلے میں مزید اور چند ضروری تفصیلات فراہم کرکے اب ہیرا گولڈ میں یونٹ کے مطابق ٹریڈنگ شروع ہو جائے گی۔ واضح رہے کہ ہیرا گروپ گولڈ ٹریڈنگ میں ایک یونٹ کی رقم پچیس ہزار رکھی گئی ہے۔ اور فائدہ رقم ماہانہ اکاﺅنٹ میں آیا کریں گے۔ ان تمام باتوں کی تفصیلات مطیع الرحمن عزیز کمپنی سے منسلک ایک سرمایہ کار نے دی ہے۔
مزید تفصیلات کے طور پر مطیع الرحمن عزیز نے بتایا کہ سختی اور آزمائش کے دنوں سے گزرنے کے بعد کمپنی سی ای او عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ سپریم کورٹ کے حکم سے کہ اب ہیرا گروپ آف کمپنیز اپنی تمام تجارتوں کو چلا سکتا ہے۔ ایک جنوری 2022 سے ہیرا گروپ نے اپنے شاپنگ مال، مارٹ اور دیگر طرح کے تجارتوں کی شروعات کر دی تھی۔ اسی سلسلے کی ایک کڑی اب ہیرا گولڈ ٹریڈنگ کی شکل میں شروع کی گئی ہے۔ کمپنی کے پے درپے الگ الگ اقدامات سے بھارت اور دنیا بھر کے لوگ حیران وششدر ہیں کہ بے شمار سازشوں کے باوجود آخر کار کمپنی سرخروئی سے ہمکنار ہوئی اور نہ صرف سرخرو ہوئی بلکہ ایک ایک کرکے اپنے تمام پرانی اور نئی تجارتوں کے دروازے کھولتے چلے جا رہے ہیں۔ ضمنی عدالتوں سے لے کر ہائی کورٹ کے راستے سپریم کورٹ تک اذیت ناک تکلیف اور امتحان سے گزر کر یہ دیکھا جا رہا تھا کہ ممکن ہے کمپنی کے پیچھے پڑے ہوئے لوگوں کا کوئی فریبی حربہ کامیاب ہو ۔ لیکن کمپنی کی حقانیت کو دیکھ کر ضمنی عدالتوں نے دانتوں تلے انگلیاں دبالیں۔ ہائی کورٹ نے ہیرا گروپ کو روکنے اور اسے نا چلنے دینے کے پیچھے ایجنسیوں اور لوگوں کی منشا پر سوال اٹھایا تو سپریم کورٹ نے ہیرا گروپ کے پیچھے لگی جانچ ایجنسیوں پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ”ہمیں رحم آتا ہے کہ سالوں گزر جانے کے باوجود جانچ ایجنسیوں کو ہیرا گروپ کے خلاف کچھ نہیں مل سکا۔ لیکن پھر بھی ایجنسیاںوقت پر وقت طلب کر رہے ہیں۔ ہیرا گروپ سرخروئی سے ہمکنار ہوئی اور باقی شدہ معاملات کا بھی جلد حل تلاش کر لیا جائے گا۔ ہیرا گروپ آف کمپنیز کی سی ای او عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ اور بورڈ آف ڈائرکٹرس کے عزم و استقلال کا اس سے بڑا ثبوت اور کیا ہوگا کہ وہ ہیرا گولڈ ٹریڈنگ کا سلسلہ شروع کرکے اپنی صداقت کا ڈنکا بجا رہی ہیں۔ ڈاکٹر صاحبہ کہتی ہیں کہ مشکل وقت ضرور ہے، لیکن دشمن کو ہم خاموش رہ کر خو ش ہونے کا موقع نہیں دیں گے۔ دشمن اگر غلط فہمی میں یہ سمجھ بیٹھے گا کہ وہ کامیاب ہو گیا ہے تو ہماری خاموشی اس کی اس چھوٹی سی غلط فہمی میں حصہ داری سمجھی جائے گی۔ کمپنی آزمائش کے وقت سے دو چار ضرور ہوئی ہے، لیکن بہت سارے سوالات اور خرافات کے دروازے یہاں سے بند ہو گئے ہیں۔ اب ذیلی عدالتوں میں جا کر کمپنی کو جانچ پڑتال کے کٹگھرے میں کھڑا نہیں کیا جا سکے گا۔ ابھی حال ہی میں اس بات کا پختہ ثبوت بھی آگیا۔ واقعہ کچھ اس طرح سے تھا کہ ای ڈی نے ہیرا گروپ کے اقدامات پر سوال اٹھاتے ہوئے ایف آئی آر کیا ، اور کورٹ میں اپنا مدعا بتایا کیا۔ جواب کے طور پر ہیرا گروپ آف کمپنیز نے سپریم کورٹ تک ہونے والے معاملات کا تفصیلی خاکہ پیش کیا۔ جس کے جواب میں جج صاحب نے تمام معاملات کو بغور مطالعہ کرتے ہوئے ای ڈی کو اپنی حد میں رہنے کے لئے کہا۔ اور سپریم کورٹ میں معاملہ ہونے اور پچھلی شکایتوں کی سماعت ہوجانے کو مد نظر رکھتے ہوئے ای ڈی کو پٹھکار لگاتے ہوئے کہا کہ ای ڈی دوبارہ کبھی ہیرا گروپ کے معاملات میں دخل اندازی نہیں کر سکتی اور نا ہی ریاست تلنگانہ میں ای ڈی کا کچھ سناجائے گا۔ لہذا انفارسمنٹ ڈائرکٹوریٹ کے ہاتھوں یہ معاملہ منسوخ کر کے ہمیشہ کے لئے کالعدم قرار دیا جاتا ہے ۔ اس لئے کہ ہیرا گروپ کا ای ڈی سپریم کورٹ میں ایک پارٹی کے طور پر معاملہ سنا اور دیکھا جا رہا ہے۔

Related posts

वर्तमान समय के मीर सादिक और मीर जाफ़र

Paigam Madre Watan

عام آدمی پارٹی نے دہلی اور ہریانہ میں اپنے پانچ امیدواروں کا اعلان کیا

Paigam Madre Watan

کیجریوال حکومت نے آنجہانی کورونا جنگجو پردیپ کمار کے خاندان کو ایک کروڑ روپے کا اعزازیہ فراہم کیا: راج کمار آنند

Paigam Madre Watan

Leave a Comment

türkiye nin en iyi reklam ajansları türkiye nin en iyi ajansları istanbul un en iyi reklam ajansları türkiye nin en ünlü reklam ajansları türkiyenin en büyük reklam ajansları istanbul daki reklam ajansları türkiye nin en büyük reklam ajansları türkiye reklam ajansları en büyük ajanslar