National قومی خبریں

مشرقی افریقہ کے شہر دارالسلام کی شیعہ جماعت میں رضوان ممدانی اور ان کے ساتھی فلسطینیوں کے نام سے لوگوں سے پیسہ لوٹنا بند کریں, مولانا حسن علی راجانی

مہوا: (پی ایم ڈبلیو نیوز )گجرات کے ساحلی شہر مہوا سے مولانا حسن علی راجانی نے مشرقی افریقہ کے ملک تانزانیہ کی راجدھانی دارالسلام سے آکر کہا کہ دارالسلام میں رضوان ممدانی اور ان کے دوستوں نے میرے نام سے لوگوں سے پندرہ روز تک خوب پیسہ وصولہ ہیں اور ابھی بھی فیروز گانگو جیسے اور عباس سچو اور عون علی قاسم جیسے چور مکار, لوگوں سے ہیسہ وصول کر رہے ہیں. مولانا راجانی نے یہاں تک کہا کہ دارالسلام میں فیک سید دزباری علماء بھی فلسطین کے نام سے لوگوں کو لٹ رہے ہیں جو سراسر غلط ہے. مولانا راجانی نے کہا ابھی کل ہی فرانس سے ایک سو ملین یورو فلسطین کو دئے گئے ہیں, اور ایسے ہی کئی ممالک سے ہزاروں کروڑ ڈولر فلسطین کیلئے جا چکے ہیں, تو پھر دارالسلام میں فیک سید درباری علماء اور ان کے غنڈے فیروز گانگو جیسے لوگوں سے فلسطین کے نام سے پیسہ کیوں وصول کر رہے ہیں. مولانا راجانی نے یہاں تک کہا کہ رضوان ممدانی اور ان کے ساتھیوں نے میرے نام سے بھی لوگوں سے خوب پسہ وصول کیا اور مجھے آدھی رات کو زبردسی خالی ھاتھ ایرورٹ جا کر فلائٹ پر بٹھا دیا اس لئے کہ ان لوگوں کو ابھی فلسطینیوں کے نام سے پیسہ جمع کرکے ہندوستان آکر خوب عیاشیاں کرنا ہیں. مولانا راجانی نے کہا کہ میرے جیسے عالم کیلئے رضوان ممدانی اور فیروز گانگو ایک کپ چای پلانے کیلئے بھی سب کو منع کرکے آئے اور جب جماعت کا کوئی چمچہ بیمار ہوتا ہے تو دارالسلام کی خوجہ جماعت اس کے علاج اور عیاشیاں کرنے کیلۓ پچاس پچاس ہزار ڈولر جمع کرتی ہیں. جب کہ راجانی نے کہا کہ ہم یا ہمارے جیسے دارالسلام میں بیمار پڑتے ہیں تو نہ ہمیں کبھی فیک سید درباری علماء نے کبھی ہزار شیلینگ ادھار دیا اور نہ کبھی اور کسی نے ایک ہزار شیلیگ ادھار دیا لیکن دارالسلام میں کچھ لوگ ہیں جو خوجہ کو نہیں دیکھتے وہ خدا کو دیکھتے ہیں لہذا ہمیں کہیں سے نہ کہیں سے پیسہ مل جاتا ہے. مولانا راجانی نے کہا آج دارالسلام کی خوجہ جماعت کا مکروہ چہرہ لوگوں کے سامنے ہیں کہ جہاں وہ ایک طرف ایک آدمی پر ایک ایک لاکھ ڈولر خرچ کرتی ہیں تو وہیں پر ہمارے جیسا مومن کو کوئی ایک ہزار شیلیگ پیناڈول لینے کیلئے بھی دینا چاہے تو اس کو خوجہ جماعت روکتی ہیں, مولانا راجانی نے مثال دیتے ہوئے کہا کہ سب سے پہلا چور رضوان ممدانی ہے. دوسرا چور فیرز گانگو ہے. اور تیسرا چور عباس سچوہے. اور چوتھا چور عون علی قاسم ہے , مولانا راجانی نے کہا کہ ان سب چوروں کو اور فیک سید درباری علماء کو دارالسلام کی جماعت ہی نے پال کر رکھا ہے. اور ہمارے جیسوں کا حق نہ دے کر دارالسلام کی جماعت ان چوروں کو جب یہ مرنے لگینگے اور جھنم کی طرف جانے والے ہونگے اس وقت ایک ایک لاکھ ڈولر جمع کرکے انہیں ہندوسان بھیجے گی اور یہ چور ہندوستان آکر اپنے علاج کے ساتھ ساتھ عیاشیاں بھی کریگا اور واصل جھنم ہونے تک داراسلام کی خوجہ جماعت اس کیلیے پیسہ جمع کر کر کے بھیجتی رہیگی, اورمیرے جیسا ہمیشہ تکلیف میں رہ کر خوجہ جماعت کی مخالفت کا بھی سامنا کرتا رہیگا, آخر میں مولانا راجانی نے صاف صاف کہا کہ اب پوری دنیا میں دارالسلام کی خوجہ جماعت کے صدر محمد رضا دیوجی کا مکروہ چہرہ بھی سامنے آگیا ہے اور اب محمد رضا کے چمچہ دارالسلام میں مومنین سے بھیک مانگتے ہیکہ آپ محمد رضا کو گالیاں نہ دیں

Related posts

BEL registers a growth of 49% in PAT during 3rd Quarter of FY 2023-24

Paigam Madre Watan

Alima Dr. Nowhera Sheikh’s sheer determination to transform Hyderabad’s Old City into a Gold City

Paigam Madre Watan

BEL receives orders worth Rs 4878 crores

Paigam Madre Watan

Leave a Comment

türkiye nin en iyi reklam ajansları türkiye nin en iyi ajansları istanbul un en iyi reklam ajansları türkiye nin en ünlü reklam ajansları türkiyenin en büyük reklam ajansları istanbul daki reklam ajansları türkiye nin en büyük reklam ajansları türkiye reklam ajansları en büyük ajanslar