Delhi دہلی

عام آدمی پارٹی کی ‘میں بھی کیجریوال’ دستخطی مہم 30 دسمبر تک چلے گی،

4 جنوری سے 7 جنوری 2024 تک عوامی جلسے ہوں گے


دہلی کے لوگ پوچھ رہے ہیں کہ کیا مودی حکومت اروند کیجریوال کو اچھے کاموں کے لیے گرفتار کرنا چاہتی ہے؟ گوپال رائے


نئی دہلی(پی ایم ڈبلیو نیوز)عام آدمی پارٹی کی "میں بھی کیجریوال” دستخطی مہم کو دہلی کے لوگوں کی طرف سے زبردست ردعمل مل رہا ہے۔ عوام سے ملنے والی زبردست حمایت کے پیش نظر پارٹی نے گھر گھر مہم کی مدت بڑھانے کا اعلان کیا ہے۔ اب یہ مہم 30 دسمبر 2023 تک چلے گی۔ عام آدمی پارٹی کے قائدین اور کارکنان30 دسمبر تک ہم لوگوں کے گھر گھر جا کر ان کی رائے لیں گے۔ عام آدمی پارٹی کے ریاستی کنوینر اور دہلی حکومت میں وزیر گوپال رائے نے کہا کہ دہلی کے لوگوں کی طرف سے ملنے والے پیار اور زبردست حمایت کو دیکھتے ہوئے گھر گھر مہم جو 20 دسمبر تک چل رہی تھی، اب 30 دسمبر تک چلے گی۔ 2023۔ اس کے بعد ہمارے قائدین 4 جنوری سے7 جنوری 2024 تک پوری دہلی میں عوامی جلسے کریں گے۔گوپال رائے نے مزید کہا کہ مودی حکومت جس طرح عام آدمی پارٹی اور دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال کے خلاف سازش کر رہی ہے اس سے دہلی کے لوگ بہت ناراض ہیں۔ لوگ کہتے ہیں کہ اروند کیجریوال نے ہمارے لیے اچھے اسکول اور اسپتال بنائے ہیں۔ آج خواتین کو بس میں مفت سفر مل رہا ہے۔ ہمارے بجلی اور پانی کے بل زیرو آرہے ہیں۔ اروند کیجریوال نے کوئی بدعنوانی نہیں کی۔ کیا مودی سرکار ہمارے لیڈر کو اچھے کاموں پر گرفتار کرنا چاہتی ہے؟دہلی کے لوگ کہہ رہے ہیں کہ جو کام دہلی میں ہمارے لیے کسی حکومت نے نہیں کیا وہ دہلی کے بیٹے اروند کیجریوال کر رہے ہیں۔ ہم اپنے وزیراعلیٰ کو گرفتار نہیں ہونے دیں گے۔ اگر وہ گرفتار ہوئے تو ہم بھی ان کے ساتھ جیل جائیں گے۔ ہماری مہم کو دہلی کے لوگوں کی طرف سے یک طرفہ حمایت مل رہی ہے۔ مودی حکومت کی آمریت کے خلاف عوام ایک آواز میں کہہ رہے ہیں کہ اگر مودی حکومت دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال کو گرفتار کرتی ہے تو انہیں استعفیٰ نہیں دینا چاہیے۔ اسے جیل میں رہ کر حکومت چلانی چاہیے۔ عام آدمی پارٹی کے ریاستی نائب صدر اور ایم ایل اے رتوراج جھا نے کہا کہ ‘میں بھی کیجریوال’ مہم کے لیے ہمیں توقع سے زیادہ حمایت مل رہی ہے۔ نریندر مودی جی ملک میں اگر کسی سے ڈرتے ہیں تو وہ کیجریوال جی ہیں۔ اب ان کا خوف اس حد تک بڑھ گیا ہے کہ وزیر اعلیٰ کو فرضی کیس کے ذریعے نشانہ بنایا جا رہا ہے۔آج ای ڈی اور سی بی آئی حکومت کی کٹھ پتلی بن کر کام کر رہے ہیں۔ سرکاری اداروں کا ایسا غلط استعمال دنیا میں کہیں نہیں دیکھا گیا۔ آج مودی حکومت کی ایجنسیوں کی ایمانداری پر سوال اٹھ رہے ہیں۔ اگر ای ڈی اور سی بی آئی نے اپنا کام ایمانداری سے کیا ہوتا تو ملک کو لوٹنے والے بدعنوان آج ملک کو چھوڑ کر وہ بیرون ملک میں مزے نہ کررہے ہوتے وہ لوگ جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہوتے۔ مودی حکومت سیاسی فائدے کے لیے ای ڈی اور سی بی آئی کا استعمال کر رہی ہے۔ مودی حکومت کی ہدایت پر ای ڈی اور سی بی آئی فرضی کیس درج کرکے عام آدمی پارٹی کے لیڈروں کو جیل میں ڈالنے کا کام کر رہی ہے۔

Related posts

دہلی کے بعد اب پنجاب میں بھی حکومت عوام کے گھر گھر جا کر کام کرے گی، دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال اور پنجاب کے وزیر اعلی بھگونت مان نے ‘ڈور اسٹیپ’ اسکیم کا آغاز کیا

Paigam Madre Watan

اس پالیسی کے تحت، اگر 400 یونٹ سے زیادہ بجلی استعمال کرنے والے صارفین چھتوں پر سولر لگاتے ہیں، تو ان کا بل صفر ہو جائے گا: آتشی

Paigam Madre Watan

بی جے پی نفرت انگیز ایجنڈے کے ساتھ لوگوں کو تقسیم کر رہی ہے جو ملک کی سلامتی اور سالمیت کے لیے تباہ کن ہے۔ایس ڈی پی آئی

Paigam Madre Watan

Leave a Comment