National قومی خبریں

 عالمہ ڈاکٹرنوہیرا شیخ نے ملک گیر یاترا کا کیا آغاز

 ایم ای پی کل ہند صدر کا 30 دن 30 ریاستوں میں پہنچنے کا عہد


نئی دہلی (ریلیز مطیع الرحمن عزیز)عالمہ ڈاکٹرنوہیراشیخ آل انڈیا مہیلا امپاور منٹ پارٹی کی بانیہ اور قومی صدر، آنے والے لوک سبھا کے انتخابات سے قبل ایک تبدیلی کا آغاز کے طور پر 30 ریاستوں میں ایک ملک گیر یاترہ / ٹور کریں گی۔ اس یاترہ کے دوران عالمہ ڈاکٹرنوہیرہ شیخ لوگوں کو ہرکونے اور ہرگوشے سے تعلق رکھنے والے بنا کسی ذات پات، رنگ نسل کی تفریق کیے ایک سرگرم اور متحرک شخصیت کے طور پر ملیں گی، ان کی پریشانیوں، خدشات اور خواہشوں کو دھیان سے سنیں گی۔ یاترہ کا مقصد شہریوں کےلئے ایک منصوبہ اور مستقل پلیٹ فارم تیار کرنا ہو گا تاکہ وہ اپنے مسائل کا اظہار کر سکیں، خاص طور پر عورتوں کودرپیش چیلنجز پر پوری طرح سے قابو پانا ہو گا۔ انکا دورہ بہت ہی اہم ہو گا تاکہ عوام کی مختلف ضروریات کو سمجھاجا سکے اور سیاسی گفتگو میں مزید انصرامی حیثیت سے شامل ہوا جا سکے۔ یہ وسیع دورہ نچلی سطح پر جمہوریت کے تئیں پارٹی کی وابستگی اور مقامی سطح پر لوگوں کے مسائل اور ا ±نہیں درپیش تکالیف کو دور کرنے کے لیے ا ±ن کے لگن کی عکاسی کرے گا۔ مختلف ریاستوں میں افراد کو درپیش چیلنجوں کوپورے جوش و خروش سے سن کرعالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ عوام کی آواز کو سیاسی ایجنڈے میں شامل کرنے کی مخلصانہ کوشش کا مظاہرہ کریں گی۔ اس سے یہ ذکر کرنے میں زور دیا جائے گا کہ یہ یاترا شہریوں کی ضروریات کو سمجھنے اور ملک بھر میں عورتوں کو مضبوط بنانے کی طرف عہدی بندی دکھاتا ہے۔ عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ کا منصوبہ ہے کہ ان کا مستعد ہدف اور مخصوص مقصد کو ان علاقوں میں لے کر جائیں، جہاں وہ ان کے مسائل کا حامی بنیں گی اور ملکی سطح پر معنوی نمائندگی کے لئے کام کریں گی۔ اس قومی یاترہ کے دوران عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ ان ریاستوں میں محنتی عوام سے فعالانہ طور پر مشغول ہوں گی اور اپنے مخصوص ذرائع ابلاغ سے معلوم کرنے کی کوشش میں کوئی کسر نہیں اٹھا رکھیں گی، جس سے کی وہ غریبوں کی تکلیفات کو توجہ دے سکیں۔ ا ±ن کا ارادہ صرف سننے کی حد تک نہیں، بلکہ وہ ان افراد کیلئے حکومت کے سامنے وکالت کریں گی، ان کی چیلنجز کی طرف حکومت کی توجہ مبذول کرنے اور مو ¿ثر حل تک پہنچانے کی کاوش کریں گی۔ غریبوں اور پسماندہ لوگوں کے ساتھ براہ راست بات چیت کرتے ہوئے عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ کا مقصد ان لوگوں کے لیے آواز بننا ہے جنہیں اکثر سنا نہیں جاتا ہے، اس بات کو یقینی بنانا ہے کہ ان کی شکایات کو حکومت کی اعلیٰ سطحوں پر تسلیم کیا جائے اور ان کا ازالہ کیا جائے۔ یہ فعال نقطہ نظر سماجی انصاف اور بااختیار بنانے کے لیے ان کی لگن کو واضح کرتا ہے، کیونکہ وہ ملک بھر میں کم مراعات یافتہ طبقے کے حقوق اور بہبود کے لیے لڑنے کی کوشش کرتی ہے۔ اس یاترا کے تعلق سے پارٹی رکن مطیع الرحمن عزیز نے کہا کہ عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ سماج کے ان تمام طبقات سے جڑنے کے لیے پرعزم ہیں جنہوں نے گزشتہ کئی سالوں سے چیلنجز کا سامنا کیا ہے۔ ا ±ن کا ایجنڈا صرف جدوجہد کا مشاہدہ کرنا نہیں ہے بلکہ ان لوگوں کے ساتھ فعال طور پر مشغول ہونا اور ہمدردی کرنا ہے جنہوں نے مشکلات کا سامنا کیا ہے۔ اتر پردیش کارگزار صدر نے کہاکہ وہ حکومت کے سامنے ان کے بنیادی حقوق کی وکالت کرتے ہوئے، ان کے مقصد کی حمایت کریں گی۔ آبادی کے مختلف طبقات کو درپیش متنوع چیلنجز کو سمجھ کر، وہ انصاف اور مساوی مواقع کے لیے ایک وکیل بننے کا ارادہ رکھتی ہے۔یقینی طور پر وہ اس بات پر قائم ہیں کہ ہر شہری کو بنیادی حقوق اور باعث اعزاز معاشرتی حالات کا حق حاصل ہو، ا ±ن کی یہ کوشش رہی گی کہ ا ±ن عوام کے درپیش مسائل کو حکومت کے سامنے پیش کریں ، جو مختلف حل ہوں، اور پالیسیوں میں تبدیلی کی مانگ کرتے ہوئے ، مختلف مسائل کا حل کریں”، انہوں نے مزید کہا.” انہوں نے خواتین کی فلاح و بہبود کو فروغ دینے کے لئے بھاری محنتیں کی ہیں، اپنا وقت اور توانائی ان پہلوو ¿ں پر وقف کرتے ہوئے ا ±ن عناصر پر جو سیدھے طور پر خواتین کے فائدے اور انکی حالت کی بہتری پر دلالت کرتے ہیں۔
انہوں نے اپنے موثر کام کے ذریعہ مثبت تبدیلی پیدا کرنے کیلئے ایڑی سے چوٹی کا زور لگا دیا ہے، تاکہ خواتین کی زندگی کے تمام پہلوو ¿ں کو مضبوط بناتے ہوئے ا ±نکے اندر مثبت سوچ اور انکی بھلائی اور حقوق کے لیے وکالت کر سکیں۔ا ±ن کا اس مقصد کے لئے عزم مصمم ایک دائمی اثر ڈالتا ہے، جو خواتین کو مضبوط ہونے اور اجتماعی بہتری میں مدد فراہم کرنے والے ماحول کو بڑھاوا دینے میں مدد فراہم کرتا ہے۔عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ لوک سبھا انتخابات میں دو اکھاڑوں سے میدان میں اترنے کیلئے تیار ہیں ۔ ا ±ن کی امیدواری دو اہم علاقوں پر مشتمل ہوگی، ایک مہاراشٹر کے مشہور شہر اورنگ آباد میں اور دوسراحیدرآباد میں۔یہ حکمت عملی ا ±ن کے عزم مصمم کے استقلال کو ظاہر کرتا ہے کہ وہ مختلف کمیونٹیز کے ساتھ مشغول ہونے اور ان مختلف علاقوں میں رہائش حاصل کرنے والے لوگوں کے درپیش مسائل حل کرنے کا عہد کرتی ہے۔جبکہ وہ انتخابی اکھاڑہ میں قدم رکھتی ہیں، عالمہ ڈاکٹر شیخ کا مقصد یہ ہوتا ہے کہ وہ اپنے فعال اور سرگرم، نیک کردار اور فرض کی ادائیگی میں ثابت قدم ثابت ہوں، پوری جانبازی کےساتھ ان حلقوں کے مسائل کو حل کرنے میں مدد کریں اور قومی سطح پر معنی خیز نمائندگی کی طرف کام کریں۔

Related posts

Will the Telangana Congress Government teach a lesson to the corrupted Khawaja Moinuddin Telangana Waqf Property Affairs Officer? : Matiur Rahman Aziz

Paigam Madre Watan

ہزاروں کی تعداد و پر نم آنکھوں سے جناب محمد زماں رحمہ اللہ سپردخاک

Paigam Madre Watan

AIMEP Founder President Dr. Nowhera Shaik Sets Sights on 500-Seat Lok Sabha Battle

Paigam Madre Watan

Leave a Comment