Parwaz پرواز

’حمد رب غفور‘

تخلیق: مولانا عزیز الرحمن سلفی 

ماخوذ: شعری مجموعہ پرواز


مالک کائنات تو، خالق ہفت آسماں
ظاہر ہر ایک شے سے ہے،تیرے وجود کا نشاں


برگ و شجر ہو یا کلی، یاکوئی ذرّۂ زمیں
ہر شے میں تیرا حسن ہے، چاند ہویا کہ کہکشاں


شام وسحر کی گردشیں، ضوئِ نہار، تارشب
دن کا طلو ع غروب یا، شب کاہو ماہِ ضوفشاں


میری حیات وموت بھی ،میری غنا و فقر بھی
موجِ صبا ہو یاکہ ہو،بحر کی موجِ بیکراں


تیرے ہی حکم سے سحاب، تجھ سے ہے آب کا نزول
ہرہر نفس پہ ہے فقط، تیری ہی ذات حکمراں


تیری نگا ہ شرق و غرب، دریا کی تہہ میں بھی ہے تو
تیری ہی مِلک ہر مکاں، تیرا ہی مُلک لامکاں


آتی ہے دور کوہ سے، بہتی ہوئی جو آب جُو
گاتی ہے تیری ہی ثناء، ہردم ہے تیری حمد خواں


رقصاں اِدھر اُدھر نظر، آتے جو ہیں پرند سب
اڑتے ہوئے فضا میں کون، اور ہے ان کا نگہِ باں


یارب توہی رحیم ہے، بس تو ہے قادر و قدیر
میں ہوں عزیز ؔمشت خاک، تو ہے غفور عاصیاں

Related posts

مبشر سعید ’فرانس‘ سے

Paigam Madre Watan

’حمد خدائے عزوجل‘

Paigam Madre Watan

’دل کی آواز‘

Paigam Madre Watan

Leave a Comment